Press "Enter" to skip to content

اندھیر نگری چوپٹ راج

admin 1
by Mohsin shaikh

 

طوطے کی طرح رٹے رٹائے خرافات نکالنے سے پہلے زمینی حقائق بھی معلوم ہونے چاہیے لال مسجد تحریک طالبان کا مرکز تھی اور نہ وہاں کوئی عورت یا بچی ہلاک ہوئی البتہ 74 دہشت گرد مارے گے 224 اب بھی گرفتار ہیں اور یہ اعتراف مولانا عبدالعزیز اپنے حالیہ پروگرام میں کرچکے ہیں،کسی پاکستانی کو امریکہ کے حوالے نہیں کیا گیا، جو امریکہ کے حوالے کیے گے انکو ان کے ممالک نے لینے سے انکار کردیا بشمول اسامہ بن لادن مشرف کے دور میں صرف چار ڈرون حملے ہوئے تھے،2004 07 کے درمیان تکنیکی طور پرڈرون حملے روکے ہی نہیں جاسکے اسکے لیے امریکہ کو اجازت کی ضرورت نہیں،البتہ بیت اللہ محسود پر ڈرون حملے کے لیے ضرور تقاضہ کیا گیا 8 سال تک مگر امریکہ خود اس درندے کو تحفظ دیتا رہا-

این آر او کا مطالبہ کس کا تھا کس نے ان حرام الدہر سیاستدانوں کی واپسی کے لیے دباؤ ڈالا اور اگر این آر او کے زریعے آبھی گے توکس نے ووٹ ڈالے،اپنی حماقتوں اور جاہلتوں کا الزام اکیلے شخص پر دینا صرف منافقت ہے،بے نظیر اور مشرف کا معاہدہ ہوچکا تھا،لہذا یہ صرف خرافات ہے کہ مشرف نے بے نظیر کو مروایا، بے نظیر کے مرنے کا فائدہ جتنا زرداری اینڈ نوازشریف کو ہوا ہے مشرف کو1٪ بھی ہوا، ججز نے ایسے کونسے کام کیے جن پر انکو شاباشی دی جاتی بلکہ اسٹیل ملز کو پرائیوٹ کرنے سے روکنے کی کوشش کی ،جو مل 2008 تک 40 کڑور کا فائدہ دے رہی تھی آج 40 ارب کے نقصان میں ہے،جن دہشت گردوں کو سزائے موت دینی چاہیے تھی انکو با عزت بری کرتی رہی ہے، پچھلے 12 سال میں کسی ایک دہشت گرد کو سزائے نہیں دی گئی-

عافیہ 2008 میں افغانستان کے صوبے غزنی سے گرفتار ہوئی تھی اور اسکو گرفتارکرنے والا تھا افغان ڈپٹی پولیس چیف کرنل عبدالغنی، 11 مئی سے قبل میاں صاحب ڈاکڑ عافیہ کو اقتدار میں آتے ہی رہا کروانے کے دعویدار تھے آج 8 ماہ ہوچکے ہے میاں صاحب کو اقتدار پر براجمان ہوئے تو کیا اب بھول گے میاں صاحب عافیہ کی رہائی کو یہاں صرف اس عورت کے نام پر سیاست چمکائی جارہی ہے، مہنگائی ڈرونز رشوت کرپٹ خوری اور دھرنے ریلیاں جلسے کیے جارہے ہے ایک دوسرے کی مخالفت کی جارہی ہے ٹانگے کنیچھی جارہی ہے ایک دوسرے کی مگر حاصل کچھ نہیں ہورہا احکام کا بھی وہی حال ہے اور اعوام کا بھی وہی حال ہے، مشرف کیس پر اعوام کو الجھایا جارہا ہے اور بیوقوفوں کو صرف احمق بنایا گیا اور آج جو کچھ مشرف کے خلاف ہورہا ہے اس پلید کرپٹ منافقت بھرے نظام کا حصہ ہے، تمام کرپٹ جعلی ڈگری مجرم پیشہ ور لوگوں کو الیکشن لڑنے کی اجازت دی گئی-

اگر توہین عدالت کا کیس ہے تو سب سے پہلے نواز شریف کو سزا ہونی چاہیے جس نے 1997 میں سپریم کورٹ پر حملہ کروایا تھا اور ججز کو جوتے پڑوائے تھے زرا کوئی بتائے کہ میاں صاحب کا آج تک کوئی احتساب کیوں نہیں ہوا اسکو کہتے ہیں اندھیر نگری چوپٹ راج-

06 Jan, 2014

 

PropellerAds
  1. admin admin

    thank u bhai rehman
    By: mohsin shaikh,on Jan, 09 2014
    Reply Reply
    100 Like
    ریٹائرڈ کمانڈو جب لندن میں ایک انٹرویو دے رہے تھے یا یوں کہہ لیجیے کہ لوگوں کو بے وقوف بنانے میں مصروف تھے‘ اس موقع پر ایک طالبہ نے یہ اعتراض اٹھایا کہ جنرل صاحب‘ آپ نے تو ایک چھ ماہ کے بچے کو بھی القاعدہ کا کارکن قرار دے کر امریکا کے حوالے کر دیا تھا۔ لیکن جنرل صاحب مکر گئے یا اپنے کارنامے انہیں یاد نہیں رہے۔ انہوں نے اس کا انکار کیا تو طالبہ نے اسرار کیا کہ اس جرم کا اعتراف تو آپ اپنی کتاب میں بھی کر چکے ہیں۔ طالبہ نے اسرار کیا کہ کتاب منگوائی جائے۔ IN THE LINE OF FIRE نامی کتاب‘ جس کا ترجمہ کسی نے ”جہنم کی قطار میں“ کیا ہے‘ لائی گئی ۔ جنرل صاحب کو وہ پیرا گراف پڑھ کر سنایا گیا جس میں انہوں نے اعتراف کیا ہے کہ ” ہم نے القاعدہ کے 15 افراد کو امریکا کے حوالے کیا تھا یہ ایک خاندان تھا اور اس میں چھ ماہ کا بچہ بھی شامل تھا“۔ جنرل صاحب نے دوسرے کی خواندگی پر اعتبار نہیں کیا بلکہ خود اپنی ہی کتاب کا مذکورہ پیرا گراف پڑھا اور کہا ” معافی چاہتا ہوں‘ میں بھول گیا تھا‘ SORRY“۔
    جنرل صاحب نے اپنی بھول چوک پر معافی مانگی ہے‘ کیا ہی اچھا ہوتا کہ وہ اس چھ ماہ کے بچے سے معافی مانگتے جس پر سفاک قاتلوں کی قید میں جانے کیا بیتی ہوگی اور اس کے والدین کس کرب سے گزرے ہوں گے۔
    By: Abdul Rehman, Doha Qatar on Jan, 08 2014
    Reply Reply
    0 Like
    Dear mohsin noor ap wasi to bohot acha likhty hi likin ap ki ya Tahrer pir kar bohot afsos howa ya tahrer ma ni Facebook pir bi dakhi hi likin ap si umeed nahi thi ki ap ki khiyalat bi asi hi KON kahta hi ki LAL Masjid ma 74 afrad mari gi kya ap ki pass koi saboot hi afsoos
    By: Abdul Rehman, Doha Qatar on Jan, 08 2014

Comments are closed.